ننگرہار صوبے کے مرکز جلا ل آباد میں خاتون صحافی ملالہ میوند کو قتل کر دیا گیا

IMG-20231126-WA0003.jpg

عبداللہ ہوڈ

افغا نستان کے مشرقی صوبے ننگرہار کے مرکز جلال آباد میں نجی ٹی ٹیلی وژن کی خاتون صحافی اور اینکر ملالہ میووند کو جمعرات کی صبح جلال آباد میں دفتر جاتے ہوئے نامعلوم مسلح افراد نے اُن کی گاڑی پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں وہ اپنے ڈرائیور محمد طاہر سمت قتل کردی

واقعے کی ذمہ داری تاحال کسی نے قبول نہیں کی تاہم ننگرہار صوبے کے محکمہ اطلاعات نے میڈیا کو جاری ایک بیان میں واقع کی شدید الفاظ مزمت کی اور ملوث افراد کے جلد گرفتاری اور اُن کو قرار واقع سزا دینے کے لئے تما م وسائل برائے کار لانے لائے جائینگے۔

پچیس سالہ خاتون صحافی ملالہ میوند گزشتہ سات سال سے میڈیا میں کام کر رہی تھیں اور کٹھن حالت میں اُنہوں نے میڈیا کے ساتھ کام شروع کی تھی۔ملالہ انعکاس ٹی وی سے دیگر نشریاتی اداروں کے ساتھ وابستہ رہی۔ صحافت کے علاوہ وہ سماجی کارکن بھی رہی اور افغانستا ن میں خواتین کے حقوق کے لئے کام کرتی رہی جبکہ موجودہ وقت میں یونیورسٹی سے قانون اور سیاسیات کی تعلیم حاصل کر رہی تھی۔

حال ہی میں جلال آباد میں ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے اوان واقعات کے بارے میں افغانستان کے نوجوانوں نے اپنے تاثرات میں اس صورتحال کو تشوناک قرار دیگر حکومتی ذمہ دران کو تنقید کا نشانہ بنایا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

scroll to top