پشاور میں گرانفروشوں اور تجاوزات کے خلاف آپریشن ،67 گرفتار

3e5d123f-3b60-45d8-9f5d-4c42910d88d2-e1552487763803.jpg

 

ضلعی انتظامیہ پشاور نے گرانفروشوں اور تجاوزات مافیا کے خلاف کاروائیاں تیز کر دی ہیں اور پشاور کے مختلف علاقوں سے بیشتر افراد کو گرانفروشی اور تجاوزات قائم کرنے پر گرفتار کیا گیا ہے۔

ترجمان ڈپٹی کمشنر پشاور کے مطابق ڈپٹی کمشنر پشاور ڈاکٹر عمران حامد شیخ کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنر سارہ رحمان نے ورسک روڈ پر مختلف دکانوں اور ریسٹورنٹس کی چیکنگ کی۔کاروائی کے دوران گرانفروشی اور دکانوں سے باہر سامان رکھنے پر 19 افراد کو گرفتار کیا گیا۔

ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر ٹاؤن ٹو ہمایون خان نے چارسدہ روڈ پر خزانہ، بخشو پل اور ناگمان کے علاقے میں دکانوں سے باہر تجاوزات قائم کرنے اور گرانفروشی پر 23 افراد کو گرفتار کیا۔ ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر پی ڈی اے نجید اللہ خان نے حیات آباد میں لالہ زار مارکیٹ، طارق مارکیٹ اور سپر مارکیٹ سمیت دیگر مارکیٹوں میں مختلف دکانوں کی چیکنگ کر تے ہوئے دکانوں سے باہر سامان رکھنے اور گرانفروشی پر 16 افراد کو گرفتار کیا۔

ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر بی آر ٹی عبد الولی نے جی ٹی روڈ پر مختلف دکانوں کی چیکنگ کر نے ہوئے دکانوں سے باہر تجاوزات قائم کرنے پر 9 افراد کو گرفتار کیا۔کاروائیوں کے دوران نانبائیوں کی روٹی کا وزن بھی چیک کیا گیا اور بیشتر نانبائیوں کو کم وزن روٹی فروخت کرنے پر گرفتار کیا گیا۔ان گرفتار افراد میں تجاوزات مافیا، سبزی و فروٹ مالکان، نانبائی، جنرل سٹور مالکان اور دیگر شامل ہیں۔

انتظامیہ کے مطابق ان گرفتار افراد کے خلاف قانون کے مطابق سخت کاروائی عمل میں لائی جا ئے گی۔ ڈپٹی کمشنر پشاور ڈاکٹر عمران حامد شیخ نے تمام ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنرز کو اپنے علاقوں میں تجاوزات مافیا اور گرانفروشوں کے خلاف کاروائیاں تیز کرنے کی ہدایت کی ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

scroll to top