افغانستان کے ساتھ تجارت کو فروغ دینا اولین ترجیح ہے،سپیکر اسد قیصر

108151934_2062113040579863_3422381447422581522_o.jpg

اسلام آباد:اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی زیر صدارت پاک افغان فرینڈ شپ گروپ کی ایگزیکٹیو کمیٹی کی پہلی ٹاسک فورس کے حوالے سے اجلاس کا اہتمام کیا گیا۔

قومی اسمبلی کے سیکرٹریٹ میں ہونے والے اجلاس میں وزیر دفاع پرویز خٹک،وزیر اعلیٰ خیبر پختونخواہ محمود خان، وزیر اعظم کے خصوصی ایلچی برائے افغانستان صادق خان سمیت متعلقہ وزارتوں کے اعلیٰ حکام اور سرحد چیمبر آف کامرس و ایوان صنعت و تجارت کے نمائندوں نے  شرکت کی۔

اجلاس میں پاک افغان تجارت کو فروغ دینے اور باڈرز پر مال بردارکنٹینرز کی نقل و حمل میں رکاٹوں کو دور کرنے کے حوالے سے معاملات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

اسپیکر اسد قیصر نے پہلی ٹاسک فورس کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ افغانستان کے ساتھ تجارت کو فروغ دینا موجودہ حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔

انہوں نے کہا کہ دو طرفہ تجارت کی راہ میں حائل رکاوٹوں کو دور کرنے کے لیے ہر ممکن اقدامات اُٹھائے جار ہے ہیں۔اُن کا کہنا تھا کہ دونوں ممالک کے مابین تجارت کو فروغ دینے اور عوامی سطح پر رابطوں میں اضافے کے لیے پارلیمان اپنا بھرپور کردار ادا کرے گی۔

سرحد چیمبر آف کارمرس و ایوان صنعت و تجارت کے نمائندوں نے پاک افغان تجارت کے فروغ کے لیے اسپیکر کی گہری دلچسپی کو سراہا۔

سرحد چیمبر آف کامرس  کے نمائندوں کی جانب سے اجلاس کو بتایا گیا کہ باڈرز پر کنٹینرز کے کلیئرنس کے عمل میں تاخیر سے تجارتی سامان کے خراب ہونے کا خطرہ ہوتا ہے۔ انہوں نے باڈرز پر کنٹینرز کے کلیئرنس کے عمل میں تیزی لانے کے لیے اقدامات اٹھائے جانے کی ضرورت پر زور دیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

scroll to top