آزاد اور خودمختار پاکستان میں مجھے اپنے بھائیوں سے ملنے نہیں دیا گیا،ایمل ولی

79672313_2694795463915450_2956327157791457280_n.jpg

پشاور:عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر ایمل ولی خان نے کہا ہے کہ بطور پاکستانی بکاخیل کیمپ کا دورہ کرنا ان کا حق ہے لیکن افسوس کہ آج ایک آزاد اور خود مختار پاکستان میں اپنے بھائیوں سے ملنے نہیں دیا گیا۔ بنوں کے تنظیمی دورے کے چوتھے روز بکاخیل کیمپ میں جانے سے روکنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ وہ دیکھنا چاہتے تھے کہ بڑے بڑے دعوے کرنے والوں نے متاثرین وزیرستان کیلئے سردی میں کچھ انتظام کیا ہے یا نہیں۔

کیمپ میں جانے سے روکے جانے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے ایمل ولی خان نے کہا کہ آج کا دن بھی تاریخ کے اوراق میں یاد رکھا جائیگا۔ کیا صرف ملاقات سے بھی اب ملک کے طاقتور ڈرنے لگے ہیں اورکیمپ کے اندر کیا ہے جو چھپایا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ناانصافی ہے کہ ان کو اپنے لوگوں سے ملنے نہ دیا گیا۔

انہوں نے اس موقع پر اس عزم کا اظہار کیا کہ وہ اپنی آواز پسے ہوئے اور مظلوم طبقے کیلئے ہر پلیٹ فارم پر اٹھاتے رہینگے۔ خطے میں جنگ کے بارے میں ان کا کہنا تھا کہ جس پارٹی کے ہزاروں کارکن شہید ہوئے ان سے کہا گیا کہ اس نے پرایا جنگ اپنایا جبکہ ہم تو اسے روز اول سے فساد کہہ کر آرہے ہیں۔ آج چالیس سال بعد ہمارے اسلاف کے کہے ہوئے الفاظ کو ہر شخص اپنا کر بڑے فخر کے ساتھ دہرارہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ وسائل پر قبضے کے لئے پختون سرزمین کو جنگ کا مرکز بنادیا گیا ہے۔ اگر ہم اپنی قوم کے حقوق مانگنے سے باز آجائیں تو سارے بڑے عہدے اور مناصب ہمارے ہوں گے۔ ہماری پارٹی اور ہم کو اس لئے پسند نہیں کیا جاتا کیونکہ ہم اپنی قوم کے حقوق، گیس، بجلی کی رائلٹی اور پختونوں کے اتحاد کی بات کرتے ہیں۔

 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

scroll to top